28

شہباز شریف کی پیشی، لیگی کارکنوں کی احتساب عدالت جانے کی کوشش، پولیس کا لاٹھی چارج، میدان جنگ کا سماں


لاہور (ڈیلی پریس کانفرنس)اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کی پیشی کے موقع پر ن لیگی کارکنوں اور پولیس کے درمیان ہاتھا پائی ہوئی ہے۔ پولیس کی جانب سے متعدد لیگی کارکنوں کو حراست میں لے لیا۔

ضرور پڑھیں: اربوں کی چینی غائب کرنے کے کیس کی سماعت وکیل صفائی کی عدم موجودگی کے باعث کچھ دیر کیلئے ملتوی
آشیانہ ہاﺅسنگ سکینڈل میں شہباز شریف کی پیشی کے موقع پر ن لیگ کے کارکنوں کی بڑی تعداد احتساب عدالت پہنچ گئی۔ پولیس کی جانب سے عدالت کا راستہ خاردار تاریں لگا کر بند کیا گیا تھا تاہم لیگی کارکنوں نے تمام رکاوٹیں ہٹادیں اور عدالت میں داخل ہونے کی کوشش کی۔ ن لیگ کی خواتین کارکنوں نے پولیس اہلکاروں کو دھکے بھی مارے جس کے بعد پولیس نے ایکشن لیا اور کارکنوں کو عدالت کے دروازے سے پیچھے ہٹادیا۔ پولیس کی جانب سے لاٹھی چارج بھی کیا گیا اور احتساب عدالت کے اندر جانے کی کوشش کرنے والے متعدد لیگی کارکنوں کو حراست میں لے لیا گیا۔ پولیس کے لاٹھی چارج کے بعد لیگی کارکن وقتی طور پر پیچھے ہٹ گئے لیکن پھر دوبارہ کارکن آگے آگئے اور شدید نعرے بازی شروع کردی۔

دوسری جانب مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب اور شائستہ پرویز ملک سمیت ن لیگ کے ارکان اسمبلی بھی احتساب عدالت کے باہر موجود ہیں اور اپنی اپنی گاڑیوں میں بیٹھے ہوئے ہیں۔

ضرور پڑھیں: سابق وزیراعظم نوازشریف کیلئے نئی پریشانی، حکومت وقت نے کونسا کیس نیب کو بھیج دیا؟ ن لیگ میں کھلبلی مچ گئی
(ڈیلی پریس کانفرنس) کا کہنا ہے کہ ایم پی اے شوکت سہیل بٹ اور شائستہ پرویز ملک سمیت دیگر لیگی ارکان اسمبلی اپنے ہمراہ کارکنوں کو لے کر آئے تھے ۔ لیگی قیادت کی جانب سے کارکنوں کو جوش دلایا جاتا رہا اور آگے بڑھنے کیلئے اکسایا جاتا رہا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں