145

امریکی مداخلت، وینزویلا میں سوشلسٹ حکومت لڑکھڑانے لگی


کراکس: (ڈیلی پریس کانفرنس) ٹرمپ کی مداخلت سے وینزویلا میں سوشلسٹ حکومت لڑکھڑانے لگی، اپوزیشن لیڈر گوائڈو نے خود کو صدر قرار دیدیا۔ امریکا اور یورپی یونین سمیت کئی ممالک نے حزب اختلاف کے رہنما کو صدر تسلیم کر لیا۔ ملک میں اپوزیشن کے مظاہروں کے دوران ہلاک افراد کی تعداد تیرہ ہوگئی۔

وینزویلا میں رواں ماہ صدارت کا عہدہ سنبھالنے والے نکولس ماڈورو کے خلاف احتجاج کے بعد 35 سالہ اپوزیشن لیڈر گوائڈو خود کو صدر قرار دے دیا۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ، برازیل، کولمبیا اور پیرو سمیت جنوبی امریکی ممالک نے بھی گوائڈو کو صدر تسلیم کر لیا۔ جس کےبعد نکولس ماڈورو نے امریکا کے ساتھ سفارتی تعلقات توڑتے ہوئے امریکی سفارتکاروں کو 72 گھنٹے میں وینزویلا سے نکلنے کا حکم دے دیا۔ صدارتی محل میں ٹی وی پر قوم سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے ملک میں امریکی مداخلت پر سخت غصے کا اظہار کیا۔

امریکا نے وینزویلا سے سفارتی عملہ نکالنے سے انکار کرتے ہوئے کہا ہے کہ صدر ماڈورو کے پاس عملہ نکالنے کا اختیار نہیں ہے۔ ادھر اپوزیشن لیڈر نے ملک میں احتجاج جاری رکھنے کا اعلان کرتے ہوئے فورسز کو بھی حکومت کے خلاف جانے کے لیے کہا۔ صدرماڈرو کے خلاف دو روز کے مظاہروں کے دوران پولیس کے ساتھ جھڑپوں میں 13 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں